نعتیں سرکار ﷺ کی پڑھتا ہوں میں

نعتیں سرکار کی پڑھتاہوں میں


نعتیں سرکار ﷺ کی پڑھتا ہوں میں

 بس اسی بات سے گھر میں میرے رحمت ہوگی

••••••••••

 اک تیرا ﷺ نام وسیلہ ہے میرا

رنج و غم میں بھی اسی نام سے راحت ہوگی

••••••••••

 یہ سنا ہے کہ بہت قبر اندھیری ہوگی

 قبر کا خوف نہ رکھنا اے دل وہاں سرکار ﷺ کے چہرے کی زیارت ہوگی

••••••••••

 کبھی یٰسیں کبھی طٰہٰ کبھی وَالَّیل آیا جس کی قسمیں میرا رب فرمائے

 کتنی دلکش میرے محبوب ﷺ کی صورت ہوگی

••••••••••

 ان کو مختار بنایا میرے اللہ نے

 خلد میں بس وہی جا سکتا ہے جس کو حسنینؓ کے نانا کی اجازت ہوگی

••••••••••

 حشر کا دن بھی عجب دیکھنے والا ہوگا

 زلف لہراتے وہ جب آئیں گے پھر قیامت میں بھی خود ایک قیامت ہوگی

••••••••••

 میرا دامن تو گناہوں سے بھرا ہے الطافؔ

 اک سہارا ہے کہ میں تیرا ہوں اسی نسبت سے سر حشر شفاعت ہوگی

••••••••••

 صلی اللہ علیہ وآلہ وصحبہ وبارک وسلم




ایک تبصرہ شائع کریں

جدید تر اس سے پرانی